وزیرِ اعظم سے مشروبات بنانے والی بین الاقوامی کمپنیوں کے وفد کی ملاقات

وزیرِ اعظم سے مشروبات بنانے والی بین الاقوامی کمپنیوں کے وفد کی ملاقات

وفد کے ارکان نے وزیرِ اعظم کی قیادت میں حکومت کی کاروبار دوست پالیسیوں پر انہیں خراجِ تحسین پیش کیا. وفد نے آگاہ کیا کہ بین الاقوامی مشروبات بنانے والی کمپنیوں کے پاکستان میں 25 کے قریب کارخانے ہیں جن میں 1 لاکھ 30 ہزار لوگوں کو براہ راست روزگار فراہم کیا جاتا ہے. وفد نے وزیرِ اعظم کو کمپنیوں کی جانب سے ملک میں ری سائیکلنگ کے سب سے بڑے نظام کے حوالے سے آگاہ کرنے کے ساتھ ساتھ بتایا کہ یہ کمپنیاں ملکی خزانے کو ٹیکس کی مد میں ہر برس خطیر حصہ ادا کرتی ہیں. بیرونی سرمایہ کاروں اور کاروباری برادری کو ملک میں روزگار کی فراہمی، ملکی برآمدات میں اضافے اور معاشی ترقی میں اپنا بھرپور کردار ادا کرنے کیلئے حکومت ہر قسم کی معاونت فراہم کر رہی ہے.

وزیرِ اعظم. خوش آئند امر ہے کہ حکومت کی کاروبار دوست پالیسیوں کے مثبت نتائج آنا شروع ہو گئے ہیں.بین الاقوامی کمپنیاں کارپوریٹ سوشل ریسپانسبیلیٹی (CSR) کے تحت سرگرمیوں سے اپنا مثبت کردار ادا کریں وزیرِ اعظم نے متعقلہ حکام کو بین الاقوامی کمپنیوں کی تجاویز پر مشاورت کے بعد انکے مسائل کا حل جلد پیش کرنے کی ہدایت کر دی. اجلاس میں کوکاکولا پاکستان و افغانستان کے نائب صدر وولکان اونگ±چ (Volkan Onguc)، محمد کھوسہ سی ای او پیپسی کو پاکستان و افغانستان کی قیادت میں وفد نے شرکت کی. وفاقی وزرائ جام کمال خان، رانا تنویر حسین، عبدالعلیم خان اور متعلقہ اعلی حکام بھی اجلاس میں شریک تھے.

اپنا تبصرہ لکھیں