سی پیک منصوبوں کی تکمیل کیلئے ہمیں چین سے دو قدم آگے چلنا ہوگا، احسن اقبال

سی پیک منصوبوں کی تکمیل کیلئے ہمیں چین سے دو قدم آگے چلنا ہوگا، احسن اقبال

اسلام آؓباد(ویب ڈیسک)وفاقی وزیر منصوبہ بندی ترقی وخصوصی اقدامات احسن اقبال نے کہا ہے کہ،ہمیں خطے میں اپنی جغرافیائی مرکزیت کو مواقع میں بدلنے کے لئے ٹھوس منصوبہ بندی کرنا ہوگی،علاقائی تعاون، اپنے اور روابط کے حوالے سے پاکستان خطے میں اہم ترین ملک ہے۔ سی پیک منصوبوں کی تکمیل کے لیے اب ہمیں چین سے دو قدم آگے چلنا ہو گا ،ان خیالات کا اظہار انہوں نے منگل کودورہ چین کے حوالے سے جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔اجلاس میں سیکرٹری ریلوے ، سیکرٹری این ایچ اے ، ایڈیشنل سیکرٹری پاور اور وزارت منصوبہ بندی کے اعلی حکام نے شرکت کی اجلاس میںوفاقی وزیر کو مختلف وزارتوں کے حوالے سے دورہ چین کے دوران پیش کیے جانے والے منصوبوں پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔احسن اقبال نے کہا کہ سی پیک فیز 2 کی پیش رفت کو یقینی بنانا دورہ چین کا اہم ایجنڈا ہو گا۔

سی پیک منصوبوں کی تکمیل کے لیے اب ہمیں چین سے دو قدم آگے چلنا ہو گا۔چین نے ایک واضح وڑن اور روڈمیپ کے ساتھ ترقی کی وفاقی وزیر نے کہا کہ ملکی ترقی کے لیے ہمیں بھی ایک وڑن کو لے کر چلنا ہو گا، علاقائی تعاون، اپنے اور روابط کے حوالے سے پاکستان خطے میں اہم ترین ملک ہےانہو ں نے کہا کہ دورہ چین پر ایم ایل ون ایک اہم ایجنڈا ہو گا، ایم ایل ون ڈیڑھ سو سال پرانا ٹریک ہے اور اگر اب اس پر کام شروع نہ کیا گیا تو خدانخواستہ ہم مزید حادثات کا شکار ہوں سکتے ہیں۔ احسن اقبال نے کہا کہ ایم ایل ون پر ہمارے مواصلات اور تجارت کے شعبوں کے لئے ناگزیر ہے،۔وفاقی وزیر نے کہا کہ ہمیں خطے میں اپنی جغرافیائی مرکزیت کو مواقع میں بدلنے کے لئے ٹھوس منصوبہ بندی کرنا ہوگی

فارچونر بھول جائیں، چنگان نے اپنی لگڑری ایس یو وی کی قیمتیں گرا دیں

ریکوڈک منصوبے میں سعودی کمپنی10 ارب ڈالر سرمایہ کاری کریگی

اپنا تبصرہ لکھیں