پاکستان نے1971 میں قید ہونیوالے فوجیوں کی فہرست بھارت کے حوالے کردی ، جلد رہائی کا مطالبہ

پاکستان نے1971 میں قید ہونیوالے فوجیوں کی فہرست بھارت کے حوالے کردی ، جلد رہائی کا مطالبہ

پاکستان نے1971 میں قید ہونیوالے فوجیوں کی فہرست بھارت کے حوالے کردی ، جلد رہائی کا مطالبہ

دفتر خارجہ کے ترجمان ہفت وار بریفنگ میں کہا ہے کہ شہباز شریف آستانہ میں سرکاری دورہ پر ہیں، تاہم آج وہ وطن واپسی پر ایس سی او کے میٹنگ میں وزیر اعظم شرکت کرینگے۔ایس سی ای او میں وزیر اعظم ممبران سے بھی ملاقات کرینگے۔ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق کل وزیر اعظم نے آستانہ میں مختلف رہنماؤں سے بھی ملاقات کی۔ دفتر خارجہ کے ترجمان کے مطابق جولائی کے فرسٹ کو انڈیا اور پاکستان نے قیدیوں کی فہرست کا تبادلہ کیا۔ بھارت میں قید 3سو 65افراد کی فہرست بھی شئر کی گئی۔ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق1971 کی جنگ میں ممکنہ طور پرانڈیا کی جیل میں قید فوجی اہلکاروں کی فہرست بھی انڈیا کیساتھ شیئر کی گئی۔ پاکستان نے انڈیا میں پاکستانی قیدیوں کی وطن واپسی کو یقینی بنانے کا مطالبہ کیا ہے۔

ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ یو ایس ادارے کی جانب سے پاکستان میں مذہبی آزادی کے اوپر بنائی گئی رپورٹ کی مذمت کرتے ہیں۔یو ایس کی پاکستان کے حوالے سے بنائی گئی رپورٹ حقائق پر مبنی نہیں ہے۔۔ پاکستان میں ہر فرد کو مذہبی ازادی حاصل ہے.ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق اس رپورٹ کا آدھا حصہ غلط اور تحقیق کے بغیر لکھا گیا ہے۔دفتر خارجہ کے ترجمان نے بتایا کہ غزہ سے میڈیکل اسٹوڈینٹس پاکستان میں میڈیکل تعیلم حاصل کرنے آئے ہیں۔یہ میڈیکل طالبہ پاکستان کے میڈیکل کالج میں آرتھو پیڈک ، شعبہ قلب سے متعلق تعلیم حاصل کرینگے۔

اپنا تبصرہ لکھیں